سمارٹ فون ٹیکنالوجی، حجاج کے موبائل میں چلنے والے قدموں کا حساب لگانا آسان

intelligent086

TM Star
Nov 10, 2010
3,871
3,804
1,313
Lahore,Pakistan
سمارٹ فون ٹیکنالوجی، حجاج کے موبائل میں چلنے والے قدموں کا حساب لگانا آسان
115148

ریاض: (ویب ڈیسک) منٰی میں سمارٹ فون ہر ایک حاجی کے ہاتھ میں ہے جس سے اندازہ لگانا آسان ہوگیا ہے کہ آخر منٰی میں حجاج رمی جمرات تک جانے اور آنے میں کتنی مسافت طے کرتے ہیں۔


غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق خیموں سے جمرات تک جانے اور واپس آنے کیلئے ہر حاجی کو اوسط 6 کلو میٹر پیدل چلنا پڑتا ہے۔ بعض حجاج کے موبائل میں چلنے والے قدموں کا حساب کیا جاتا ہے جبکہ بعض نے کلو میٹر کا حساب لگایا ہوا ہے۔

115149


حاجی کا موبائل بتا رہا ہے اس نے 11 کلو میٹر کی مسافت طے کی جس کے دوران اسے 17849 قدم چلنا پڑا۔ سروے میں شامل ایک حاجی کے موبائل سے معلوم ہوا ہے کہ عید کے پہلے دن اسے 21109قدم چلنا پڑا۔ ایک اور حاجی کے موبائل سے معلوم ہوا کہ اس نے 11 کلو میٹر کی مسافت طے کی جس کے دوران اسے 17849 قدم چلنا پڑا۔
115150

خیموں سے جمرات تک جانے اور واپس آنے کے لئے ہر حاجی کو اوسط 6 کلو میٹر پیدل چلنا پڑتا ہے، ایک تیسرے حاجی کا موبائل بتا رہا تھا کہ اس نے عید کے دن 13.9 کلو میٹر کی مسافت طے کی تھی جس کے دوران اسے 20125 قدم چلنا پڑا۔
 
  • Like
Reactions: maria_1
Top
Forgot your password?