1. This site uses cookies. By continuing to use this site, you are agreeing to our use of cookies. Learn More.

طوعاً یا کرہاً۔۔۔۔۔

Discussion in 'Nimra Ahmda Novels/Iqtebas' started by nizamuddin, Aug 4, 2015.

  1. nizamuddin

    nizamuddin
    Expand Collapse
    Senior Member

    Joined:
    Jan 10, 2015
    Messages:
    775
    Likes Received:
    280
    جب روز قیامت اللہ زمین آسمان کو بلائے گا ۔۔۔۔ تو ہر چیز کھنچی چلی آئے گی ۔۔۔ طوعاً یا کرہاً۔۔۔۔۔ خوشی سے یا ناخوشی سے ۔۔۔۔۔۔ جب ہم اللہ کے بلانے پر نماز اور قرآن کی طرف نہیں آتے تو اللہ ہمارے لئے ایسے حالات بنادیتا ہے، یہ دنیا اتنی تنگ کردیتا ہے کہ ہمیں زبردستی، سخت ناخوشی کے عالم میں آنا پڑتا ہے اور پھر ہم کرہاً بھی بھاگ کر آتے ہیں اور اس کے علاوہ ہمیں کہیں پناہ نہیں ملتی۔۔۔۔۔۔۔۔ اس کی طرف طوعاً آجاؤ محمل۔۔۔۔۔۔۔! ورنہ تمہیں کرہاً آنا پڑے گا۔

    (نمرہ احمد کے ناول ’’مصحف‘‘ سے اقتباس)
    [​IMG]

     
  2. Bird-Of-Paradise

    Bird-Of-Paradise
    Expand Collapse
    TM ki Birdie
    VIP

    Joined:
    Aug 31, 2013
    Messages:
    23,932
    Likes Received:
    11,035
    Nyc sharing
     
  3. shehr-e-tanhayi

    shehr-e-tanhayi
    Expand Collapse
    Super Magic Jori
    Moderator

    Joined:
    Jul 20, 2015
    Messages:
    29,712
    Likes Received:
    6,469
    Nice sharing
     

Share This Page