کسی خوش نگاہ سی آنکھ نے

ROHAAN

TM Star
Aug 14, 2016
1,163
850
263


کسی خوش نگاہ سی آنکھ نے

کسی خوش نگاہ سی آنکھ نے کمال مجھ پہ کرم کيا
مری روح جاں پہ رقم کيا

وہ جو ايک چاند سا حرف تھا وہ جو ايک شام سا نام تھا
وہ جو ايک پھول سي بات پھرتی تھی در بدر
اسے گلستان کا پتا ديا

مرا دل کہ شہر ملال تھا اسے روشنی ميں بسا ديا
میری آنکھ اور مرے خواب کو کسی ايک پل میں بہم کيا

مرے آئنوں پہ جو گرد تھي مہ و سال کي
وہ اتر گئي

وہ جو دھند تھي مرے چار سو وہ بکھر گئي
ابھي روپ عکس جمال کے
سبھي خواب شام و صال کے

جو غبار وقت ميں سر بسر تھے آئے ہوئے
وہ چمک اٹھے

وہ جو پھول راہ کي دھول تھے، وہ مہک اٹھے
لے ساتھ رنگ بہار کے
چلا ميں جو سنگ بہار کے

تو سجا ديئے سبھي راستے
کسي دشت شعبدہ سازنے

مرے نام پر مرے واسطے
مري بے گھري کو پمناہ دي مري جستجو کو نشان ديا
جو يقين سے بھي حسين ہے مجھے ايک ايسا گماں ديا

وہ جو ريزہ ريزہ وجود تھا
اسے ايک نظر ميں بہم کيا
کس خوش نگاہ سي آنکھ نے
يہ کمال مجھ پہ کرم کيا
 
Top
Forgot your password?